109

DRAP کی جانب سے کووڈ ویکسین PakVac کو عام استعمال کی منظور ی مل گئ

پاکستان کی تیار کردہ کووڈ ویکسین PacVac کو عام استعمال کے لیے ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی آف پاکستان    DRAPکی جانب سے منظوری دے دی گئ۔

DRAP کی جانب سے کووڈ ویکسین PakVac کو عام استعمال کی منظور ی مل گئ

ذرائع کے مطابق مقامی طور پر تیار کردہ پاکستانی کووڈ ویکسین PacVac کو رواں ہفتے میں استعمال کیا جاسکے گا۔

DRAP کے لیب نیشل کنٹرول لیب فار بائیو لوجیکلز کی جانب سے جانچ کے بعد استعمال کا سرٹیفیکیٹ مل گیا۔

پاکستان میں پہلی بار تیار کی جانے والی کووڈ ویکسین جسے چائنہ کی کینسانو بائیو لوجکس کی مدد سےقومی ادارہ صحت NIH میں تیار کیا گیا ہے رواں ہفتے عام استعمال کے لیے میسر ہوگی۔

DRAP کی جانب سے کووڈ ویکسین PakVac کو عام استعمال کی منظور ی مل گئ

وزارت صحت کے مطابق پہلے مرحلے میں تیار کی جانے والی ویکسین کی خوراک کی تعداد 124,000 ہے۔قومی ادارہ صحت NIH نے ویکسین کی جانچ کے بعد اسے  محفوظ قرار دے کر عام استعمال کی اجازت دے دی ہے۔

ویکسین کی تیاری قومی ادارہ صحت NIH کے پلانٹ میں ہوئی۔ جہاں پاکستانی طبی ماہرین نے چینی ماہرین کی ماتحتی میں ویکسین کو تیار کیا۔

قومی ادارہ صحت NIH ہر ماہ تین لاکھ خوراکیں پیدا کر سکے گا جس سے ملک کا دوسرے ممالک پر انحصار نمایاں طور پر کم ہو جائے گا۔

پاکستان اب تک کووڈ-19 کی ویکسین سانوفآرم، سانووک اور کینسانو چائنہ اور دوسرے ممالک سے COVAX پروگرام کے تحت درآمد کر رہا تھا۔

پاکستان پہلے ہی 30 سال سے زیادہ اور اس سے زیادہ عمر کے شہریوں کو ویکسینیشن فراہم کر رہا ہے۔ حال ہی میں   19 سال اور اس سے زیادہ عمر کے شہریوں کو بھی ویکسینیشن کے لئے رجسٹریشن کی اجازت دے دی گئی ہے۔

ملک میں اس وقت فعال کیسز کی تعداد 58,878 جبکہ اموات کی تعداد 20,736 سے بھی تجاوز کر گئی ہے۔ ملک صحتیاب ہونے والوں کی تعداد 838,322 ہے

یہ بھی پڑھیں وزیر تعلیم شفقت محمود بھی کرونا وائرس کا شکار ہو گئے

واضح رہے کہ کرونا کی تیسری لہر میں اب تک سب سے زیادہ اموات ہوئیں۔ لیکن حکومت کے بر وقت اقدامات سے اس میں کمی آئی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں