106

کرونا کی روک تھام ضروری۔۔۔۔۔ کینیڈا کا پاکستان اوربھارت سے فلائٹ آپریشن معطل کرنے کا فیصلہ

کرونا کا ایک اور وار

کینیڈا کی حکومت نے بھارت اور پاکستان میں کرونا وائرس کے مریضوں کی بڑھتی ہوئی تعداد کو دیکھتے ہوئے دونوں ممالک کے مسافروں پر ایک ماہ کے لئے کینیڈا سفر پر پابندی عائد کر دی ہے۔
ورچوئل پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کینیڈا کے وزیر ٹرانسپورٹ عمر الغابرا نے کہا کہ بھارت اور پاکستان سے بڑی تعداد میں لوگ کرونا وائرس کے ساتھ کینیڈا کی جانب سفرکر رہے ہیں لہذا ان ممالک سے تمام تجارتی اور نجی مسافر اڑانیں23 اپریل ، جمعرات کی رات 11:30 بجے سےروک دی گئی ہیں ۔انہوں نے کہا کہ ضروری سامان جیسے ویکسین اور ذاتی حفاظتی سامان کی ترسیل کو برقرار رکھنے لئے کارگو فلائٹس کو برقرار رکھا جائے گا۔
سعودی نژاد کینیڈاین وزیر ٹرانسپورٹ عمرالغابرا نے کہا کہ وہ ہوائی مسافر جو ہندوستان یا پاکستان سے روانہ ہوتے ہیں لیکن کسی تیسرے ملک کے راستے کینیڈا پہنچ جاتے ہیں انھیں کینیڈا میں داخلے کی اجازت سے قبل روانگی کے آخری موقع پر لیا جانے والا کرونا کے ٹیسٹ میں منفی نتیجہ پیش کرنا ہوگا۔
وزیر صحت پیٹی ہجدو نے کہا کہ اگرچہ کینیڈا میں داخل ہونے والے تمام ہوائی مسافروں میں سے صرف 1.8 فیصد کوہی کوویڈ 19 مثبت پایا گیا ہے تاہم ہندوستان اور پاکستان سے آنے والی پروازوں میں مسافروں کی بڑی تعداد حالیہ دنوں میں کرونا ٹیسٹ میں مثبت رہی ہے۔
بھارت حال ہی میں کورونا وائرس کے لئے عالمی سطح کا مرکز بن چکا ہے ، گذشتہ ہفتے 314،000 سے زیادہ نئے کرونا انفیکشن کے مریضوں کی اطلاع تھی۔ بھارت میں کوویڈ 19 کا ایک نیاوائرس، بی 1617 ظاہر ہوا ہے اور ماہرین کا کہنا ہے کہ ملک میں کرونا کے مریضوں کی بے تحاشا بڑھتی ہوئی تعداد نے بھارت میں اسپتالوں کے نظام کو بری طرح ناکام کر دیا ہے اور ملک میں ایک بحرانی کیفیت پیدا کر نے کا سبب بنا ہے۔

For more information read:
https://dailytimes.com.pk/748696/canada-suspends-flight-operations-from-pakistan-india/

پاکستان میں بھی کرونا کی تیسری لہر کے دوران صورت حال تشویش ناک ہے اگرچہ بھارت کی نسبت یہاں طبی حالات بے قابو نہیں ہیں ۔حالیہ اطلاعات کے مطابق گذشتہ ہفتے میں قومی سطح پر مجموعی طور پر کوویڈ 19 کے 76،757 واقعات ریکارڈ کئے گئے .مزید 4،681 افرادمیں اس مہلک وائرس کا مثبت ٹیسٹ ظاہر ہوا۔
نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سنٹر (این سی او سی) کی طرف سے جاری کردہ تازہ ترین اعلامیہ کے مطابق گذشتہ ہفتے دوران ایک سو سے زائد مریضوں کی موت ہوگئی ، جن میں سے 126 اسپتالوں میں زیر علاج اور نو اپنے متعلقہ قرنطینوں یا گھروں میں زیر علاج تھے۔
سب سے زیادہ اموات پنجاب میں ہوئی ، اس کے بعد خبر پختونخواہ میں بھی مجموعی طور پر 135 اموات میں سے 45 جاں بحق افراد اپنے علاج کے دوران وینٹیلیٹروں پر ہی دم توڑ گئے۔تمام سماجی ، ثقافتی ، تفریحی، اور د یگر تمام اندرونی اور بیرونی سرگرمیوں پر پابندی عائد کر دی گئی ہے ۔

For more information read:
https://dailytimes.com.pk/745910/pakistan-records-highest-death-toll-of-covid-19-third-wave/

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں