143

ایک بار مالدیپ ضرور جانا چاہیے- کیوں؟

ہم جب بھی سمندر، سفید ساحلوں اور سنورکلنگ سے لطف اندوز ہونے کے بارے میں سوچتے ہیں تو ہمارے ذہن میں مالدیپ کا خیال آتا ہے۔ فطرت کا یہ دور دراز علاقہ جس کے سفید ساحل، دلکش نظارے اورپانی کے اندر غیر معمولی دنیا آپ کے ہر احساس کو جوش دلاتی ہے. چاہے ایک جوڑا ہو، خاندان یا ایکسپلورر یہ خوبصورت جزیرہ ہر کسی کے لئے ایک شاندار کشش رکھتا ہے۔ اگر آپ نے اس ناقابل یقین جگہ کا جادو نہیں دیکھا تو ذیل میں دی گئی تحریر کو پڑھیں تاکہ آپ مالدیپ کی سیر کا ارادہ کر سکیں۔

مالدیپ کے گہرے پانی بلاشبہ سیاحوں کے لئے سب سے بڑی کشش کا باعث ہیں۔ مالدیپ میں پانی سے متعلق بہت سی سرگرمیاں موجود ہیں لیکن غوطہ خوری سب سے دلچسپ ہے۔‘ ٹونا‘ بٹرفلائی فش، واہو، نپولین، وراثی، ریز، منٹاس اور شارک کی  37 اقسام کے درمیان غوطہ خوری کرنا زندگی کا ایک انمول تجربہ ہے۔

غوطہ خوری کے دوران سانس لینے کا طریقہ مراقبے میں سانس لینے کے طریقے سے مشابہ ہے۔ آبی حیات کو دیکھنے سے آپ کا دماغ روزمرہ کے مسائل سے باہر نکل آتا ہے جس کے نتیجے میں ہمارے جسم اور مرکزی اعصابی نظام کو بحال کرنے میں بھی مدد ملتی ہے۔ آپ وہاں پیراسیلنگ، ویک بورڈ، سرفنگ، سٹینڈ اپ پیڈل، کینوئنگ، جیٹ سکی اور ماہی گیری جیسی تفریح کے لئے بھی جاسکتے ہیں۔

مالی:۔

مالی مالدیپ کی کل آبادی کے نصف حصے پر مشتمل ، ایک چھوٹا سا شہر ہے جہاں آپ ایک دن کی سیر کے دوران عجائب گھر، مساجد اور سنگاپور بازار کو دیکھ سکتے ہیں۔ مالی کی جمعہ مسجد اٹھارہویں صدی میں مرجان کے بلاکس سے تعمیر کی گئی ایک شاہکار کی مانند  ہے۔

آپ مالدیپ کی تاریخ سے متعلق معلومات نیشنل پارک میوزیم اور سلطان پارک میں جا کر بھی حاصل کرسکتے ہیں۔ وقت کے ساتھ مالی ایک مکمل شہر بن چکا ہے اور اسے اس کی عمارتوں کے باعث کنکریٹ کاجنگل بھی کہا جاسکتا ہے۔

بہت سے سیاح مالدیپ کے ہوائی اڈے اور ریزورٹس کے علاوہ زیادہ کچھ نہیں دیکھتے، لیکن مالدیپ کی اصل زندگی اس کے دارلحکومت کی سیر کرنے سے دیکھی جاسکتی ہے۔ مالی شہر میں سونامی اور وکٹری کی یادگاریں سب سے پرکشش مقامات ہیں۔

picture courtesy: pinterest

لذیز کھانے

مالدیپ کے کھانے اس کے گرم موسم کے عین مطابق تازہ، ہلکے پھلکے اورمصالحے دار ہوتے ہیں۔ مالدیپ کے کھانوں میں پڑوسی ممالک کے ذائقوں اورمصالحوں کا نمایاں اثر دیکھا جاسکتا ہے۔

مالدیپ کے کھانے کو دھوہی کھانے کے طور پر بھی جانا جاتا ہے۔اس بات میں کوئی تعجب نہیں کہ مچھلی مالدیپ کی بنیادی خوراک ہے۔ ٹونا ایک پسندیدہ قسم ہے جبکہ ییلوفن ٹونا، سکپ جیک ٹونا اور فریگیٹ ٹونا بھی کثرت سے کھائی جاتی ہے۔

ناریل کے دودھ اور مچھلی کے ساتھ تیار کی جانے والی رہیا کورو بھی آزمانے کے قابل ہے۔ کولہی باریک مچھلی کا کیک ہوتا ہے جسے مصالحے کے شوقین لوگ بہت پسند کرتے ہیں۔ مالدیپ کاسٹریٹ فوڈ سیاحتی توجہ کامرکز ہے اور تو اور مقامی لوگوں کا زیادہ وقت بھی یہیں گزرتا ہے۔

pic courtesy: wikipedia

آئی لینڈہاپنگ:۔

یہ جگہ قدرتی خوبصورتی سے مالا مال ہے اوراکثر سیاحوں کو اپنے ان گنت تفریحی مقامات کے باعث حیرت اور کشمکش میں ڈال دیتی ہے۔ یہاں بہت سی تفریحی سرگرمیاں موجود ہیں لیکن آئی لینڈ ہاپنگ کو نظر انداز کرنا ناممکن ہے۔

مالدیپ کے جزیرے اپنی حیثیت میں باکمال اور منفرد ہیں کیونکہ یہ روشن رنگوں سے بھر پور بائیولومینیسنٹ علاقوں میں واقع ہیں۔ (Bioluminescent)

آئی لینڈ ہاپنگ ان لوگوں کے لئے انتہائی موزوں ہے جو کشتی یا سی پلین کے ذریعے مالدیپ جانا چاہتے ہیں۔ کیا ہی بہتر ہوگا کہ آئی لینڈ ہاپنگ کی سیر کاآغاز مالی جزیرے سے کیاجائے۔ اس سیر میں بہت سی سیاحتی مکامات ہیں جن میں شاندار عمارتیں، ریستوران، اعلیٰ ریزورٹس اور بار بھی شامل ہیں۔

مالی جزیرہ آپ کو کوشش کے بغیر ہی مالدیپ کی محبت میں مبتلا کردیتا ہے۔ اگر آپ ہروقت سمندر کے قریب رہتے ہوئے ساحلی سرگرمیوں سے لطف اندوز ہوناچاہتے ہیں تو یہ چھٹیاں گزارنے کی ایک بہترین جگہ ہے خاص کرنئے شادی شدہ جوڑوں کے لئے۔

ستاروں کے نیچے مخصوص عشائیہ یقینی طور پر آپ کے ساتھی کو متاثر کرسکتا ہے۔ حقیقت یہ ہے کہ مالدیپ کاایک دورہ شاید آپ کے لئے ناکافی ہو۔ سفر کے اختتام پر جہاز میں بیٹھنا آپ کے لئے سب سے بڑی آزمائش ثابت ہوسکتا ہے کیونکہ آپ ایک پرتعیش مقام کوچھوڑنا نہیں چاہیں گے۔ یہی وجہ ہے کہ آپ کو زندگی میں ایک بار مالدیپ ضرور جانا چاہیے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں